اپنے چہرے کی جھریوں کو دور کریں – قدرتی ٹپس سے

یوں تو سردیوں کے موسم کے آتے ہی ہر طرح کی جلد مسائل کا شکار ہو جاتی ہے ۔ مگر خاص طور پر خشک جلد والوں کی تو زندگی اجیرن ہو جاتی ہے ۔ جلد پر کھینچاؤ پیدا ہو جاتا ہے ۔ اور چہرہ ،ایڑیاں وغیرہ پھٹنے لگتی ہیں ۔ جن کو دور کرنے کے لئے خواتین مختلف قسم کی کریموں کا استعمال کرتی ہیں ۔ لیکن اس طرح کی کریموں سے آپ کو وقتی آرام تو آجاتا ہے  اور چہرے پر بھی نرمی اور نمی آجاتی ہے ۔لیکن کچھ دیر کے بعد خشک ہوا کے اثر سے دوبارہ خشکی ہو جاتی ہے ، جو بعض اوقات بڑی جھنجلاہٹ کا باعث بنتی ہے ۔

جلد میں کھنچاؤ مستقل رہے تو یہ ہی آگے جا کر جھریوں کا باعث بنتا ہے ۔ جس سے خواتین کے چہرے پر اپنی عمر سے زیادہ کا تاثر پیدا ہوتا ہے ۔ یوں تو یہ جھریاں پانی کی کمی کے علاوہ زیادہ غور و فکر اور سورج کی براہ راست تپش سے بھی پڑ جاتی ہیں ۔ مگر اس کے ساتھ اگر خشک جلد بھی ہو تو جھریوں کا اندیشہ بہت بڑھ جاتا ہے ۔

خشک جلد والی خواتین کے لیے کچھ بیوٹی ٹپس ہیں ۔ انشاءاللہ ان طریقوں پر باقاعدگی سے استعمال کرنے پر خشکی سے بھی چھٹکارا حاصل کیا جاسکتا ہے ۔ اور نتیجاً جھریوں سے بھی بچا جاسکتا ہے ۔اس کے علاوہ جن خواتین کے چہرے پر جھریاں پڑ چکی ہیں وہ بھی ان قدرتی ٹپس کے استعمال سے جھریاں دور کر سکتے ہیں۔

چند عمومی ہدایات ۔۔۔

٭ یاد رکھیے سردی کے موسم میں  بار بار صابن کا استعمال اچھا نہیں ۔نہانے اور خاص طور پر منہ دھونے کے لیے سردیوں میں صابن کی بجائے خاص طور پر سردیوں کے لیے بنا صابن استعمال کریں ۔

٭نہانے سے پہلے اگر زیتون کا تیل لے کر ہلکا مساج کر لیا جائے تو جسم ملائم رہتا ہے ۔ نہانے کے بعد آپ چند قطرے زیتون کے تیل کے گلاب کے عرق میں ملا کر سارے جسم پر مل لیں تو انشاءاللہ خشکی نہیں رہے گی ۔

٭ہمیں سرد موسم میں پیاس کم لگتی ہے ، اس لیے غیر محسوس طریقے سے ہمارا پانی پینے کا تناسب خاصا کم ہو جاتا ہے ۔ یہ  بھی خشکی کی ایک بڑی وجہ ہے ۔ اس موسم میں کم از کم دن بھر میں پانچ گلاس پانی تو ضرور پئیں ۔

اب کچھ ٹوٹکے حاضر ہیں ، مگر ان کو پڑھنے سے پہلے ایک درخواست ہے کہ آپ ان ٹوٹکوں کو معمولی نہ سمجھیں ۔ دراصل آج ہماری نفسیات کچھ ایسی بن گئی ہے کہ ہماری بڑی بڑی کمپنیوں کی خوبصورت پیکنگ والی مہنگی ترین پراڈکٹس تو پورے یقین سے استعمال کرتے ہیں ، لیکن وہ قدرتی اشیاء جن سے اجزاء کشید کر کے یہ کمپنیز اپنی پراڈکٹس بناتی ہیں ، ان کے براہ راست استعمال کو ہم زیادہ اہمیت نہیں دیتے ۔ یاد رکھیے کہ جب مختلف کیمیکلز کو استعمال کر کے قدرتی نباتات سے اجزاء کشید کیے جائیں اور ایک مخصوص طریقے سے ان میں مصنوعی خوشبو اور رنگ وغیرہ شامل کیے جاتے ہیں تو اس سے خوشبو اور نفاست تو حاصل ہو جاتی ہے ،فائدے کا عمل بھی تیز ہو جاتا ہے مگر ساتھ ہی کئی ضمنی اثرات بھی بھگتنے پڑسکتے ہیں ۔

ایک بات اور ان ٹوٹکوں کو مستقل مزاجی سے کچھ عرصہ ضرور استعمال کرنا ہو گا ۔ ورنہ مکمل فائدہ نہیں ہو گا ۔ یہ سب میرے آزمودہ ہیں ۔

٭۔۔۔پکا ہوا پپیتا اور ایلوویرا کا جیل ایک ایک چمچ لے کر دونوں کو میش کر کے صاف چہرے پر روزانہ لگائیں اور بیس منٹ بعد چہرہ دھو لیں ، ڈھیلی جلد اور جھریوں کے لیے نہایت آزمودہ ہے ۔

٭۔۔۔ایلو ویرا جیل اور روغنِ بادام برابر لے کر رات کو لگا کر سو جائیں، اور صبح پانی سے دھو لیں ۔جلد نرم و ملائم ہو جائے گی ۔

٭۔۔۔ماسک کے طور پر ایک انڈے کی زردی ، خشک دودھ ایک چمچ ، شہد ایک چمچ ملا کر چہرے پر لگائیں ۔آدھے گھنٹہ بعد منہ دھو لیں ۔یہ ماسک چہرے کی تازگی کے لیے بہترین ہے ۔

٭۔۔۔دودھ کی بالائی بھی اس موسم میں ہونٹوں  اور چہرے کی خشکی کے لیے اچھی چیز ہے ۔ دن میں دو تین بار بالائی ہونٹوں پر لگانے سے ہونٹ گلابی اور نرم رہتے ہیں ۔ اسی طرح بالائی چہرے پر کچھ دیر لگانے سے بھی خشک جلد صاف اور چمک دار ہو جاتی ہے ۔

٭۔۔۔چہرے پر تازگی لانے کے لیے موسم کے پھلوں سے بھی بہت زیادہ مدد لی جاسکتی ہے ۔ ان خواتین کے لیے جنہیں صرف گوری رنگت کا شوق ہے ان کے لیے ایک بے حد مفید اور آزمودہ شربت جسے پورا سیزن پینے سے زبردست نتیجہ سامنے آتا ہے درج ذیل ہے ۔اس شربت کو سردیوں کے موسم میں باآسانی بنایا جاسکتا ہے ۔ یہ بھی میرا کئی بار کا آزمایا ہوا ہے ۔

اشیاء : انار ایک عدد، سیب ایک عدد،شہد دو چمچ ، آدھے لیموں کا رس ، گاجر دو عدد، پودینہ چند پتے ۔

انار ،سیب اور گاجر کا جوس نکال کر شہد، لیموں اور پودینہ کو ملائیں اور روز ایک گلاس پینے سے رنگت میں واضح فرق محسوس کریں ۔

Facebook Comments

POST A COMMENT.